یمنی فوج کا سعودی عسکری مراکز پر میزائلوں سے حملہ متعدد فوجی ہلاک

0

یمنی وزیر دفاع محمد ناصر العاطفی نے امریکی اور اسرائیل کے حمایت یافتہ سعودی اتحادی افواج کے حملوں کے جواب میں اب سعودی عرب کے اہم مراکز پر حملے کئے جائیں گے یمنی ڈرون طیارے اور میزائل ہمہ وقت ملکی دفاع کیلئے تیار ہیں۔۔۔۔

صنعا (میزان نیوز) یمن کی فوج اور عوامی فورس نے سعودی عرب کے علاقوں دمام، نجران اور عسیر سمیت مختلف علاقوں میں سعودی فوجی مراکز پر حملے کرکے بھاری جانی اور مالی نقصان پہنچایا ہے، میڈیا رپورٹ کے مطابق یمنی افواج نے جمعہ کو سعودی عرب کے علاقے دمام میں ایک فوجی چھاؤنی پر بیلسٹک میزائل سے حملہ کرکے ایک بار پھر سعودی حکام کو حیران کردیا ہے، جبکہ امریکہ کی جانب سے سعودی عرب کو فراہم کردہ میزائل دفاعی نظام ناکام بنادیا گیا، یمنی عہدیداروں نے دمام کی فوجی چھاؤنی پر میزائلی حملے کو جنگ یمن میں تازہ تجربہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس حملے کا واضح پیغام یہ ہے کہ یمنی عوام کے خلاف جارحیت کرنے والوں کی کہیں بھی امان نہیں ملے گی، یمنی افواج نے جمعہ کو دمام کے ساتھ ہی نجران اور عسیر میں بھی سعودی فوجی مراکز پر متعدد میزائیل حملے کئے تھے، اسی کے ساتھ عسیر میں یمنی اسنائپروں کی فائرنگ سے کم سے کم پچیس سعودی فوجی ہلاک ہوئے ہیں، یمنی افواج نے جمعہ کو اسی طرح شمالی یمن کے علاقے الجوف میں بھی سعودی فوجی مرکز پر زلزال ایک میزائل سے حملہ کیا ہے، اسی طرح کوہ النار کے مغرب اور صحرائے العاین میں سعودی اتحاد کے فوجی مراکز پر گولہ باری کرکے درجنوں جارح فوجیوں کو ہلاک اور زخمی کردیا، روسیا الیوم کی رپورٹ کے مطابق یمنی فوج کے ترجمان یحیی سریع نے کہا ہے کہ یمنی فوج نے بیلسٹک میزائل سے دمام کے فوجی ٹھکانے کو نشانہ بنایا، اس نے کہا کہ یمنی فوج سعودی عرب کی بربریت کا منہ توڑ جواب دے رہی ہے، یمنی وزیر دفاع نے سعودی اتحادی افواج کو سخت دھمکی دیتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب میں اتحادی افواج کے حساس مقامات پر خوفناک اور شدید حملے کئے جائیں گے، المیسرہ نیوز کے مطابق یمنی وزیر دفاع محمد ناصر العاطفی نے امریکی اور اسرائیل کے حمایت یافتہ سعودی اتحادی افواج کے حملوں پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے اب سعودی عرب کے اہم مراکز پر حملے کئے جائیں گے، انہوں نے کہا یمنی ڈرون طیارے اور میزائل ہمہ وقت ملکی دفاع کیلئے تیار ہیں۔

Share.

About Author

Leave A Reply