کشمیر پر بولنے سے گریز مہوش حیات سے تمغہ امتیاز واپس لیا جائے

0

ماضی میں اداکارہ سیاسی امور پر کھل کر بات کرتی آئی ہیں لیکن مظلوم کشمیریوں کیلئے کچھ بھی بولنے سے گریز کیا البتہ ٹوئٹر پر اداکارہ نے لکھا کہ یہ ویڈیو سیاق و سباق سے ہٹ کرلی گئی ہے مسئلہ کشمیر پر کھل کر بات کرتی آرہی ہوں۔۔۔

کراچی (میزان نیوز) پاکستانی اداکارہ مہوش حیات کی جانب سے مظلوم کشمیریوں کے حوالے سے کچھ بولنے سے انکار کے بعد ملک گیر سطح پر شدید تنقید کا نشانہ بن رہی ہیں، مبصرین کا خیال ہے کہ وہ کشمیر سے متعلق کچھ بولنے سے اس لئے گریزاں ہیں کہ کہیں بھارت کی فاشسٹ حکومت کشمیر کے حق میں بیان دینے پر انہیں بھارت جانے اور وہاں کام کرنے کی آرزو پوری کرنے میں رکاوٹ نہ بن جائے، اداکارہ مہوش حیات وضاحتیں تو کررہی ہیں مگر ابھی تک کشمیریوں کے حق میں کوئی بیان نہیں دیا ہے، پاکستانی میڈیا سے مربوط افراد نے حکومت پاکستان سے مطالبہ کیا ہے کہ مہوش حیات سے فوری طور پر تمغہ امتیاز واپس لیا جائے جو اس سال مارچ میں حکومت پاکستان کی طرف سے صدر مملکت عارف علوی نے دیا تھا، اداکارہ مہوش حیات سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی ویڈیو کے باعث عام لوگوں میں بھی شدید اشتعال پایا جاتا ہے، ماضی میں اداکارہ ہمیشہ ہی سیاسی امور پر کھل کر بات کرتی آئی ہیں، لیکن مظلوم کشمیریوں کیلئے اُنھوں نے کچھ بھی بولنے سے گریز کیا، البتہ ٹوئٹر پر اداکارہ نے لکھا کہ یہ ویڈیو سیاق و سباق سے ہٹ کر لی گئی ہے، میں عالمی سطح پر مسئلہ کشمیر پر کھل کر بات کرتی آرہی ہوں اور کرتی رہوں گی، میرے آگے کے بہت بڑے منصوبے بھی ہیں، اس سے قبل ماہرہ خان پر بھی الزام لگایا گیا تھا کہ وہ مسئلہ کشمیر پر کھل کر بات نہیں کرتی، جس کے بعد اداکارہ نے سوشل میڈیا پر مسئلہ کشمیر پر کھل کر بات کرنے کے ثبوت پیش کیے تھے، خیال رہے کہ بھارت کی جانب سے رواں سال 5 اگست کو مقبوضہ کشمیر کو خصوصی حیثیت دینے والے آئین کے آرٹیکل 370 کے خاتمے کے بعد دنیا بھر سے بھارتی اقدام کی مذمت کی گئی۔

Share.

About Author

Leave A Reply