فیض آباد، تحریک لبیک سے مذاکرات کامیاب دھرنا ختم کردیا جائیگا

0

پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے فیض آباد میں جاری مذہبی جماعت کے دھرنے کا نوٹس لیتے ہوئے وزیر مذہبی امور نورالحق قادری کو فوری طلب کرلیا ذرائع کے مطابق وفاقی وزیر مذہبی امور پیر نورالحق قادری لاہور سے اسلام آباد پہنچ گئے۔۔۔

اسلام آباد (میزان نیوز) پاکستان میں بریلوی مسلک کی متشدد جماعت تحریک لبیک پاکستان نے فرانس میں پیغمبرؐ اسلام کے خاکوں کی اشاعت پر ایک بار پھر ملک کے دارالحکومت اسلام آباد کے مرکزی داخلی راستے فیض آباد پر دھرنا دے دیا ہے، مظاہرین کا مطالبہ ہے کہ حکومتِ پاکستان فوری طور پر فرانسیسی سفیر کو ملک بدر کرے، پاکستان کی وزارت مذہبی امور کے ترجمان نے دعویٰ کیا ہے کہ دارالحکومت اسلام آباد اور اس کے جڑواں شہر راولپنڈی کے سنگم پر واقعے فیض آباد چوک پر دھرنا دینے والوں کے ساتھ حکومتی مذاکرات کامیاب ہوگئے ہیں اور تحریک لبیک کے رہنما جلد دھرنا ختم کرنے کا اعلان کریں گے، تحریک لبیک پاکستان کے کارکنوں نے اتوار کو راولپنڈی میں احتجاجی ریلی نکالی جس میں ہزاروں افراد شریک ہوئے، اس دوران پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپیں بھی ہوئیں اور کئی مظاہرین کو حراست میں لیا گیا، پولیس نے مظاہرین پر آنسو گیس کی شیلنگ بھی کی، تاہم اتوار کو رات گئے تحریک لبیک کے کارکن رکاوٹوں کے باوجود فیض آباد پہنچنے پر کامیاب ہوگئے اور دھرنا دے دیا، فیض آباد پہنچنے کے بعد مظاہرین نے اپنا مطالبہ دوہراتے ہوئے فرانسیسی سفیر کو ملک بدر کرنے جب کہ فرانس سے پاکستانی سفیر کو واپس بلانے پر اصرار کیا، تحریک لبیک کے دھرنے کے بعد جڑواں شہروں اسلام آباد اور راولپنڈی کے درمیان آمدورفت شدید متاثر ہو رہی ہے جب کہ کئی علاقوں میں انتظامیہ کی جانب سے موبائل فون سروس بھی بند کر دی گئی ہے، تحفظ ناموس رسالت کے نام سے یہ احتجاجی ریلی تحریک لبیک کے سربراہ خادم حسین رضوی کے اعلان پر فرانس کے میگزین میں پیغمبر اسلام کے خاکوں کی اشاعت اور فرانس کے صدر کے اسلام سے متعلق بیان کے خلاف نکالی گئی، خادم رضوی اس دھرنے میں تاحال شامل نہیں ہوئے تاہم تحریک کے رہنماؤں کا کہنا ہے کہ خادم رضوی کی واضح ہدایات ہیں کہ مطالبات پورے ہونے تک احتجاج جاری رکھا جائے، دوسری طرف وزیر اعظم عمران خان نے فیض آباد میں جاری مذہبی جماعت کے دھرنے کا نوٹس لیتے ہوئے وزیر مذہبی امور نورالحق قادری کوفوری طلب کرلیا، ذرائع کے مطابق وفاقی وزیر مذہبی امور پیر نورالحق قادری لاہور سےاسلام آباد پہنچ گئے اور وزیراعظم نے پیر نورالحق کو فیض دھرنے والوں سے مذاکرات کی ہدایت کی ہے، نورالحق وزیر اعظم کی ہدایت پر فیض آباد دھرنے والوں سے مذاکرات کریں گے، ذرائع کا کہنا ہے کہ حکومت نے مظاہرین کو اسلام آباد میں داخل نہ ہونے دینے کا فیصلہ کیا ہے اور اس سلسلے میں راولپنڈی و اسلام آباد کی انتظامیہ کو واضح ہدایات دے دی گئی ہیں، وزیراعظم عمران خان نے بھی فیصلے کی توثیق کردی ہے، وزارت داخلہ کی جانب سے گائیڈ لائن جاری کردی گئیں جب کہ مذاکرات کی ناکامی پر مکمل آپریشن کرنے کا بھی اختیار دے دیا گیا ہے۔

Share.

About Author

Leave A Reply