عراق،خودکش حملے 28 جاں بحق دہشت گردوں کو امریکہ حمایت حاصل

0

بغداد میں دو مسلسل خود کش حملوں میں درجنوں افراد زخمی بھی ہوئے ہیں عراقی فوج شام سے ملحقہ سرحد پر اب بھی داعش دہشت گردوں کے خلاف کارروائی جاری رکھے ہوئے ہے جہاں سے یہ دہشت گرد عراق میں داخل ہونے کی کوشش کرتے ہیں۔۔۔

بغداد (میزان نیوز) عراق کے دارالحکومت بغداد میں جمعرات کو دو خود کش حملوں میں 28 عراقیوں کے ہلاک ہونیکی ابتدائی اطلاع موصول ہوئی ہے، عراقی میڈیا کے مطابق درجنوں زخمی ہوئے ہیں، جن میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں، حالیہ خودکش حملے کی ذمہ داری کسی دہشت گرد تنظیم نے تسلیم نہیں کی ہے، عراقی سکیورٹی ذرائع کے مطابق داعش کے بعض علاقوں پر ناجائز حاکمیت ختم ہونے کے بعد منتشر دہشت گرد ایک سے زائد گروہ میں تقسیم ہوچکے ہیں اور اِن دہشت گردوں کو علاقائی اور طاقتور مغربی ملک(امریکہ) کی سرپرستی حاصل ہے، جمعرات کو ہونیوالے دھماکے میں بغداد کی ایک مصروف مارکیٹ کو نشانہ بنایا گیا ہے، عینی شاہدین کے مطابق پہلے دھماکے کے بعد لوگ جائے وقوعہ پر پہنچے تو اس کے کچھ ہی دیر بعد دوسرا دھماکہ بھی ہوگیا، عراقی فوج کا کہنا ہے کہ دھماکہ خیز مواد پر مشتمل جیکٹس پہنے دو بمباروں نے وسطی بغداد کے علاقے طائران کی مصروف مارکیٹ میں خود کو دھماکے سے اُڑایا، دھماکے کے وقت بڑی تعداد میں لوگ مارکیٹ میں موجود تھے، عراقی وزارتِ داخلہ کے ترجمان نے برطانوی خبر رساں ادارے کو بتایا ہے کہ کئی زخمی افراد کی حالت نازک ہے جس سے ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے، وزارتِ صحت کے حکام کے مطابق دھماکے کے بعد سکیورٹی اہلکاروں نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا ہے اور امدادی کارروائیاں شروع کردی گئی ہیں، عراقی فوج شام سے ملحقہ سرحد پر اب بھی داعش دہشت گردوں کے خلاف کارروائی جاری رکھے ہوئے ہے جہاں سے یہ دہشت گرد عراق میں داخل ہونے کی کوشش کرتے ہیں۔

Share.

About Author

Leave A Reply