سندھ حکومت آئی جی، کلیم امام سے ناخوش، خدمات وفاق کے سپرد

0

پیپلزپارٹی مطابق کلیم امام رولز پر عمل نہیں کرتے تھے پیپلزپارٹی جس طرح ماضی میں پولیس افسران اور ڈی سی کیساتھ مل کر انتخابات میں دھاندلی کرائی جاتی تھی مذکورہ تبادلہ بھی اسی کی ایک کڑی ہے کیونکہ بلدیاتی انتخابات قریب آرہے ہیں۔۔۔

کراچی (میزان نیوز) سندھ کابینہ نے انسپکٹر جنرل (آئی جی) سندھ ڈاکٹر کلیم امام کو عہدے سے ہٹانے اور ان کی خدمات وفاق کو واپس دینے کی منظوری دے دی، صوبائی کابینہ کے اجلاس کے بعد کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر اطلاعات سندھ سعید غنی نے کہا کہ آئی جی سندھ کلیم امام کو 13 دسمبر 2019ء کو لکھے گئے آخری خط میں بتا دیا گیا تھا کہ جس طرح وہ رولز کی خلاف ورزی کر رہے ہیں صوبائی حکومت اس حوالے سے اسٹیبلشمنٹ ڈویژن کو خط لکھنے پر غور کر رہی ہے، اسی کے تناظر میں آج کا اجلاس ہوا، انہوں نے کہا کہ بعض مواقع پر آئی جی سندھ نے انتہائی غیر ذمہ دارانہ بیانات بھی دیئے، جب آپ اتنے اہم عہدے پر فائز ہوتے ہیں جو کچھ آپ کہتے اور لکھتے ہیں اس کی کافی اہمیت ہوتی ہے، ایک موقع پر اگر آئی جی صوبائی حکومت کو یہ لکھے کہ کچھ افسران کو صوبے سے باہر بھیج دیا جائے اور پھر جب سندھ حکومت اس میں تاخیر کرے تو یاد دہانی بھی کرائی جائے، جب آخری افسر بھی صوبے سے باہر چلا گیا تو کلیم امام نے یہ کہا کہ انہیں اس کا ٹی وی کے ذریعے علم ہوا، ان کا کہنا تھا کہ اسی طرح مختلف مواقع پر پولیس کا محکمہ مختلف سفارتخانوں کو براہ راست خطوط لکھتا رہا جو رولز کی خلاف ورزی ہے، اس معاملے پر کچھ انٹیلی جنس ایجنسیوں نے بھی چیف سیکریٹری کو یہ لکھا کہ پولیس افسران کو اس کام سے روکا جائے لیکن روکنے کے باوجود بھی یہ سلسلہ جاری رہا، اُدھر سندھ اسمبلی کے اپوزیشن لیڈر اور پاکستان تحریک انصاف سندھ کے سینئر رہنما فردوس شمیم نقوی نے آئی جی سندھ کے تنازع پر کہا ہے کہ پیپلزپارٹی جس طرح ماضی میں پولیس افسران اور ڈی سی کے ساتھ مل کر انتخابات میں دھاندلی کرائی جاتی تھی مذکورہ تبادلہ بھی اسی کی ایک کڑی ہے کیونکہ بلدیاتی انتخابات قریب آرہے ہیں، تحریک انصاف کے رہنما نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے گورنر عمران اسمٰعیل سے رابطہ کیا ہے تاہم وہ اس بات کی تصدیق نہیں کرسکتے کہ رابطے کیلئے کون سا ذریعہ استعمال کیا، واضح رہے کہ فردوس شمیم نقوی کے بیان سے محض چند گھنٹے قبل سندھ کابینہ نے انسپکٹر جنرل (آئی جی) سندھ ڈاکٹر کلیم امام کو عہدے سے ہٹانے اور ان کی خدمات وفاق کو واپس دینے کی منظوری دی جس کے بعد تحریک انصاف سندھ کے رہنما نے اس پر ردعمل کا اظہار کیا۔

Share.

About Author

Leave A Reply