ـ حکومت تاجر برادری کو ہر ممکن سہولت فراہم کرنے کیلئے پُرعزم ہے

0

نیب سے متعلق کاروباری برادری کے تحفظات دور کرنے کیلئے لائحہ عمل بنالیا ہے اس سلسلے میں کاروباری شخصیات پر مشتمل کمیٹی تشکیل دی جائیگی تاکہ نیب اور کاروباری برادری سے متعلق معاملات کو احسن طریقے سے حل کیا جاسکے۔۔۔

اسلام آباد (میزان نیوز) پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ ہم چاہتے ہیں کہ تاجر برادری کیلئے آسانیاں پیدا ہوں اور وہ منافع بخش کاروباری سرگرمیاں کرسکے ہیں، اس سلسلے میں حکومت ان کی ہر ممکن مدد کرے گی جبکہ نیب سے متعلق کاروباری برادری کے تحفظات دور کرنے کیلئے لائحہ عمل تشکیل دیدیا ہے، وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں وزیراعظم عمران خان سے کراچی، لاہور، اسلام آباد، گوجرانوالہ، سیالکوٹ اور فیصل آباد کے ایوان صنعت و تجارت کے موجودہ اور سابق صدور کے وفد نےملاقات کی، اس موقع پر وزیراعظم کے ہمراہ مشیر خزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ، مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد، چیئرمین سرمایہ کاری بورڈ زبیر گیلانی و دیگر سینئر افسران بھی موجود تھے، ملاقات کے دوران تاجر رہنماؤں نے معیشت کی بہتری اور کاروباری سرگرمیوں میں تیزی لانے خاص طور پر برآمدات کو بڑھانے کے حوالے سے تجاویز پیش کیں، ساتھ ہی وفد نے وزیراعظم کو کاروباری برادری کو درپیش مسائل سے آگاہ کیا اور اس سلسلے میں مختلف تجاویز پیش کیں، وفد کی تجاویز پر وزیراعظم نے کہا کہ موجودہ حکومت کاروباری برادری کو ہر ممکن سہولت فراہم کرنے کیلئے پرعزم ہے، عمران خان کا کہنا تھا کہ قومی احتساب بیورو(نیب) سے متعلق کاروباری برادری کے تحفظات دور کرنے کیلئے لائحہ عمل تشکیل دیا گیا ہے اور اس سلسلے میں کاروباری شخصیات پر مشتمل کمیٹی تشکیل دی جارہی ہے تاکہ نیب اور کاروباری برادری سے متعلق معاملات کو احسن طریقے سے حل کیا جاسکے، وزیراعظم نے کہا کہ ملک کا مستقبل معیشت کی ترقی سے وابستہ ہے، کاروباری برادری اور حکومت کی مضبوط پارٹنرشپ معیشت اور ملک کی ترقی کیلئے نہایت اہم ہے، انہوں نے کہا کہ کاروباری برادری کی کامیابی ملک کی کامیابی ہے، ہم چاہتے ہیں کہ بزنس کمیونٹی کیلئے آسانیاں پیدا ہوں اور وہ منافع بخش کاروباری سرگرمیاں انجام دے سکیں اور اس سلسلے میں حکومت اس ضمن میں ہر ممکن مدد کرے گی، قبل ازیں ملاقات میں وفد نے وزیراعظم کی تاجر برادری سے مسلسل ملاقاتوں اور بزنس کمیونٹی کو ساتھ لے کر چلنے کی پالیسی کو سراہا، ساتھ ہی وفد نے وزیرِ اعظم کی اقوام متحدہ کی تقریر اور کشمیر کا مقدمہ بھرپور طریقے سے پیش کرنے پر وزیر اعظم کو خراج تحسین پیش کیا، واضح رہے کہ اس ملاقات سے قبل تاجر رہنماؤں کے ایک وفد نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی تھی، جس کے بعد انہوں نے راولپنڈی کے آرمی آڈیٹوریم میں انٹرپلے آف اکنامک اینڈ سکیورٹی کے موضوع پر منعقد سیمینار کے اختتامی سیشن سے خطاب کیا تھا، اس موقع مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ سمیت حکومت کی معاشی ٹیم بھی موجود تھی، سیمینار سے خطاب میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ قومی سلامتی کا معیشت سے قریبی تعلق ہے اور خوشحالی سکیورٹی ضروریات اور معاشی ترقی میں توازن کو فعال کرنا ہے۔

Share.

About Author

Leave A Reply