مسئلہ کشمیر پاکستان اور بھارت درمیان حل طلب تنازع ہے ، عمران

0

پاکستان اوربھارت دو جوہری طاقتیں ہیں جو کسی جنگ کی متحمل نہیں ہوسکتیں دنیا میں کچھ بھی ناممکن نہیں مسئلہ کشمیر حل کیا جاسکتا ہے اگر کشمیر کی بات نہ کریں تو بھارت سے کوئی جھگڑا ہی نہیں ۔۔۔۔۔

اسلام آباد (میزان نیوز) پاکستان کے وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ دنیا میں کچھ بھی ناممکن نہیں ہے، کشمیر کا مسئلہ بھی حل ہو سکتا ہے جبکہ کشمیر کی بات نہ کریں تو بھارت سے کوئی جھگڑا ہی نہیں، اسلام آباد میں بھارتی صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ امن ہی آگے بڑھنے کا واحد راستہ ہے اور پاکستان خطے میں امن کا خواہاں ہے، مسئلہ کشمیر دونوں ملکوں کے درمیان حل طلب تنازع ہے، دنیا میں کچھ بھی ناممکن نہیں، مسئلہ کشمیر بھی حل کیا جاسکتا ہے اور اگر کشمیر کی بات نہ کریں تو بھارت سے کوئی جھگڑا ہی نہیں، انہوں نے کہا کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان مسائل عوام کے درمیان نہیں حکومتوں کے درمیان ہیں، ہم کوشش کرتے رہیں گے کہ مذاکرات کے ذریعے مسائل حل ہوں کیونکہ پاکستان اور بھارت دو جوہری طاقتیں ہیں جو کسی جنگ کی متحمل نہیں ہو سکتیں، ان کا کہنا تھا کہ میں نے کرتارپور راہداری کی افتتاحی تقریب کے دوران بھی کہا تھا کہ ماضی صرف سیکھنے کیلئے ہوتا ہے رہنے کیلئے نہیں۔Image result for imran khan and indian journalistپاکستان اور بھارت کے درمیان بات یہیں پر آ کر رک جاتی ہے، میرے پاس بھی بھارت کی جانب سے پاکستان کے ساتھ زیادتیوں کی طویل فہرست ہے لیکن ہمیں آگے بڑھنا چاہیئے، وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان کا مائند سیٹ بل چکا ہے لیکن بھارت کا نہیں بدلا، ہم نے پہلے بھی مذاکرات کی کوشش کی لیکن بھارت نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں وزرائے خارجہ کی ملاقات منسوخ کردی، بھارتی حکومت اس وقت بات کرنے کیلئے تیار نہیں، ہم انتظار کررہے ہیں اور امید ہے کہ بھارت میں آئندہ سال انتخابات کے بعد مثبت ردعمل آئے گا، انہوں نے زور دیا کہ مذاکرات کیلئے پیشگی شرائط نہیں رکھی جانی چاہئیں کیونکہ اس کا محض یہ مطلب ہوگا کہ امن قائم کرنے کی کوئی نیت ہے، ان کا کہنا تھا کہ ہندو یاتریوں کیلئے بھی ویزے کا حصول آسان بنائیں گے، حسن ابدال اور کٹاس راج سمیت کئی مقامات ہندوؤں کیلئے مقدس ہیں، پاکستان میں مذہبی سیاحت کی تیاری کررہے ہیں۔

Share.

About Author

Leave A Reply