سعودی فوج نکلے بحرینی عوام کو فیصلہ کرنے دیا جائے

0

بحرین کے بزرگ عالم دین آیت اللہ عیسیٰ کو دی گئی حالیہ دھمکیاں نہایت شرمناک ہیں،کوئی کارروائی ہوئی تو سعودی حکومت کے خلاف اقدام کریں گے،مقتدا

بغداد (میزان نیوز) عراق کے ممتاز سیاسی ومذہبی رہنما  سید مقتدا صدر نے جمعہ کے روز جرمن خبر رسان ایجنسی سے بات چیت کرتے ہوئے سعودی شاہی حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اپنی فوج فوری طور پر بحرین سے واپس بلا لے تا کہ بحرینی دوسروں کی مداخلت کے بغیر اپنے مستقبل کا فیصلہ کرسکیں اور جس طرح کہ بحرینی عوام چاہتے ہیں اسی طرح سے فیصلہ ہونے دیا جائے۔ بیرونی مداخلت خطے کو غیر مستحکم کرئے گی اور یقینا اس کا اثر سعودی بادشاہت پر بھی پڑے گا۔

 مقتداء الصدر کی حامی بعض ویب سائٹس پر کہا گیا تھا کہ اگربحرین کی شاہی حکومت نے ملک کے بزرگ عالم دین آیت اللہ شیخ عیسی قاسم کے خلاف کوئی کاروائی کرے تو مقتدی صدر سعودی حکومت کے خلاف اقدام کریں گے۔

جرمن رپورٹر نے اس سلسلے میں مقتداءالصدر سے سوال کیا تو انھوں نے کہاکہ آیت اللہ العظمیٰ کے خلاف اقدام جس اسلامی علاقے میں بھی ہو وہ ہمارے خلاف اور ہمارے مشن کے خلاف اقدام سمجھا جاتا ہے۔

انھوں نے کہا کہ بحرین کے بزرگ عالم دین کو دی گئی حالیہ دھمکیاں نہایت شرمناک ہیں تا ہم اس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ ہم اپنے پڑوسی کے خلاف جارحیت کریں گے بلکہ ہمارا مطالبہ یہ ہے کہ سعودی عرب اپنی فوجیں بحرین سے فوری طور پر واپس بلائے تا کہ بحرینی عوام اپنے مستقبل کے بارے میں خود فیصلہ کریں۔

Share.

About Author

Leave A Reply