بحرین: سیاسی جماعت کے سربراہ شیخ علی سلمان کو عمر قید کی سزا

0

بحرین میں شاہی حکومت کی جانب سے انسانی حقوق کی خلاف وزریاں عام ہیں جبکہ عوامی جدوجہد کے دوران ابتک 159 افراد شہید اور 800 سے زائد افراد زخمی جبکہ دس ہزار سے زائد افراد قید ہیں ۔۔۔۔۔۔

منامہ (میزان نیوز) بحرین کی بادشاہ کی نگرانی میں قائم خصوصی عدالت نے جمعیت الوفاق کے سربراہ شیخ علی سلمان کو عمر قید کا حکم سنایا ہے، فارس خبر رساں ایجنسی کے مطابق جمعیت الوفاق کے سربراہ شیخ علی سلمان اور بحرین کی پارلمینٹ میں جمعیت الوفاق کے دو سابق اراکین کے خلاف اپیل کورٹ نے اتوار کے روز کیس کی سماعت کی اور شیخ علی سلمان کے ساتھ ساتھ ان دونوں سابق پارلیمانی اراکین کے خلاف بھی عمر قید کی سزا کا حکم سنا دیا، بحرین کی اس عدالت نے تینوں افراد پر قطر کیلئے جاسوسی کرنے کا الزام عائد کیا جبکہ کوئی ثبوت یا گواہ پیش نہیں کیا گیا اور صرف نام نہاد سعودی انٹیلی جنس کی ایک خفیہ رپورٹ پر اکتفا کیا گیا، بحرین میں امریکہ کا بیرون ملک سب سے بڑا فوجی اڈہ قائم ہے، جسکی وجہ سے امریکہ بحرینی بادشاہت کو عوامی اکثریت کی مخالفت کے باوجود تحفظ دے رہا ہے، بحرین کی بادشاہت آل خلیفہ خاندان کے پاس ہے، اس خاندان نے ترکوں کی عثمانی خلافت کے خاتمے کیلئے برطانوی سامراج کا ساتھ دیا اور ملکہ سے وفاداری کا حلف اُٹھایا تھا، جس کے انعام میں آل خلفیہ خاندان کو پہلے قطر کی بادشاہت آفر کی بعدازاں ایران کے پہلوی خاندان کی جانب سے بحرین سے دستبردار ہونے کے بعد آل خلفیہ کو بحرین کا بادشاہ بنادیا، انگریزوں کے وفادار اب امریکی تحفظ میں عوام کے جمہوری حق کو سلب کئے بیٹھے ہیں، بحرین برطانیہ اور امریکہ سے قطر کے بعد سب سے زیادہ اسلحہ خریدنے والا ملک ہے۔Image result for ‫بحرین میں احتجاج‬‎بحرین کی سب سے بڑی سیاسی جماعت جمعیت الوفاق کے سربراہ شیخ علی سلمان کو بحرین میں سکیورٹی فورس نے دو ہزار چودہ میں حراست میں لے لیا تھا اور پھر جولائی دو ہزار پندرہ میں ان کو چار سال قید کی سزا سنا دی گئی اور پھر سزا کے خلاف اپیل دائر کئے جانے پر ان کی قید کی سزا بڑھا کر نو سال کردی گئی اور اب ان کو عمر قید کی سزا سنا دی گئی، واضح رہے کہ بحرین میں چودہ فروری دو ہزار گیارہ سے آل خلیفہ حکومت کے خلاف عوامی احتجاج کا سلسلہ جاری ہے اور اس دوران شاہی حکومت کی جانب سے انسانی حقوق کی خلاف وزریاں عام ہیں، شاہی حکومت سے نجات کی جد وجہد میں ابتک 159 افراد شہید اور 800 سے زائد افراد زخمی ہوئے ہیں جبکہ دس ہزار سے زائد افراد کو جیل خانوں اور خفیہ عقوبت خانوں میں قید ہیں، جبکہ آل خلیفہ حکومت مخالفین کو طاقت کے بل پر کچلنے کی کوشش کررہی ہے۔

Share.

About Author

Leave A Reply