اینٹ کا جواب پتھر سے دونگا حواس باختہ ٹرمپ صحافی سے لڑ پڑے

0

اگر ڈیموکریٹک پارٹی نےمیرے خلاف قانونی جنگ کا شروع کی تو وہ خاموش نہیں رہیں گے ڈیموکریٹک پارٹی کی ایوان نمائندگان میں جیت کے بعد توقع ہے کہ نینسی پیلوسی اسپیکر کا عہدہ سنبھالیں گی ۔۔۔۔۔

واشنگٹن (میزان نیوز) امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ وسط مدتی انتخابات میں ڈیموکریٹک پارٹی کی جانب سے کانگریس کے ایوان زیریں میں اکثریت حاصل کرنے کے بعد کہا کہ وہ ان کے ساتھ مل کر کام کرنے کیلئے تیار ہیں، لیکن ساتھ ساتھ انھوں نے مزید کہا کہ اگر ڈیموکریٹک پارٹی نے ان کے خلاف تحقیقات کا اعلان کیا تو وہ بھی اینٹ کا جواب پتھر سے دیں گے، دوسری جانب ڈیموکریٹک پارٹی کی رہنما نینسی پیلوسی نے بھی کہا کہ وہ صدر ٹرمپ کے ساتھ مل جل کر کام کرنا چاہتی ہیں لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ وہ اس انتظامیہ کی نگرانی نہ کریں، بدھ کو ہونے والی پریس کانفرنس میں صدر ٹرمپ نے ڈیموکریٹک پارٹی کی سے کہا کہ وہ قانونی بنانے میں ساتھ کام کریں اور انفراسٹرکچر، تجارت اور صحت کے معاملات میں ساتھ چلیں، انھوں نے مزید کہا کہ اگر ڈیموکریٹک پارٹی نے ان کے خلاف قانونی جنگ شروع کی تو وہ اور رپبلکن پارٹی خاموش نہیں رہیں گے۔Image result for trump and journalistڈیموکریٹک پارٹی کی ایوان نمائندگان میں جیت کے بعد توقع ہے کہ نینسی پیلوسی اسپیکر کا عہدہ سنبھالیں گی، انھوں نے اپنی پریس کانفرنس میں کہا کہ وہ صدر کے ساتھ مفاہمت چاہتی ہیں لیکن ان کی جماعت اپنا موقف نہیں بدلے گی، صدر ٹرمپ نے انتخابات کے نتائج کو اپنی ٹویٹ میں شاندار کامیابی قرار دیا تھا اور کہا کہ ان کی جماعت نے سینیٹ میں اپنی اکثریت کو بہتر بنا کر نئی تاریخ رقم کی ہے، انھوں نے اپنی جماعت کے ان ممبران کا بھی مذاق اڑایا جنھوں نے صدر ٹرمپ کی کھل کر حمایت نہیں کی اور انتخابات میں انھیں شکست کا سامنا کرنا پڑا، دوسری جانب وائٹ ہاؤس نے صدر ٹرمپ کی پریس کانفرنس کے دوران ٹرمپ سے بعض سوالات کے دوران الجھنے والے نیوز چینل سی این این کے نمائندے جم اکوسٹا کا صحافتی اجازت نامہ معطل کردیا، پریس کانفرنس میں صحافی نے صدر ٹرمپ سے وسطی امریکہ سے چلنے والے تارکین وطن کے قافلے کے بارے میں سوال کیا جس پر صدر نے ان کو کہا کہ وہ بہت برے اور بدتمیز شخص ہیں اور وہ مائیک چھوڑ دیں، جہاں ایک طرف وسط مدتی انتخابات میں ہلچل مچی ہوئی تھی، وہیں دوسری جانب صدر ٹرمپ نے ملک کے اٹارنی جنرل جیف سیشنز کو نوکری سے فارغ کر دیا ہے۔

Share.

About Author

Leave A Reply