ایران کے خلاف امریکا، اسرائیل اور سعودی عرب پراکسی وار لڑرہے ہیں

0

ایران میں حالیہ مظاہروں کے دوران گرفتار ملزمان سے تفتیش کے دوران معلوم ہوا ہے کہ بیرون ملک سے آنے والی رقوم سماج دشمن عناصر کو تقسیم کی گئی تاکہ وہ سرکاری املاک کو نقصان پہنچا سکیں ۔۔۔

تہران (میزان نیوز) اسلامی جمہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا ہے کہ انٹرنیٹ اور سوشل میڈیا پر ایران کے خلاف جس قسم کی مہم چلائی جارہی ہے وہ ایرانی عوام کے خلاف پراکسی وار کے مترادف ہے، ایران کی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری علی شمخانی نے المیادین ٹی وی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ امریکا اور اس کے بعض اتحادی ممالک بشمول برطانیہ و اسرائیل اور سعودی عرب انٹرنیٹ اور سوشل میڈیا کے ذریعے ایرانی قوم کے خلاف پراکسی وار لڑرہے ہیں، جنھیں بہت جلد مایوسی کا سامنا کرنا پڑے گا اور اس مقصد کیلئے لگائی رقم ڈوب جائے گی، یاد رہے کہ گزشتہ چند روز کے دوران ایران کے چند شہروں میں مہنگائی اور دیگر اقتصادی مسائل کے متعلق احتجاج کے دوران کچھ عناصر ایسے شامل ہوئے جو غیر ملکی ایجنڈے پر کام کررہے ہیں اور انہی عناصر نے حالات کو خراب کرنے کی کوشش کی ہے، احتجاج کے دوران بعض عناصر نے غیراسلامی نعرے بلند کئے اور نجی املاک کو نقصان پہنچایا، گرفتار ہونے والے ملزمان سے تفتیش کے دوران معلوم ہوا ہے کہ بیرون ملک سے آنے والی رقوم سماج دشمن عناصر کو تقسیم کی گئی تاکہ وہ سرکاری املاک کو نقصان پہنچا سکیں۔

Image result for iran protest

علی شمخانی نے مزید کہا کہ ایران کے داخلی امور میں مداخلت کرنے کا اصل مقصد اسلامی جمہوریہ کو ترقی کے راستے سے ہٹانا ہے، ایران دشمن عناصر ایران کو ترقی کرتے نہیں دیکھ سکتے جس کی وجہ سے وہ ایران کے داخلی امور میں مداخلت کررہے ہیں، انہوں نے کہا کہ ایرانی قوم ملکی معاملات میں مداخلت پر امریکہ اور سعودی حکومت کی مداخلت پر تشویش ہے، ایران کی اعلیٰ قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری کا کہنا تھا کہ سعودی عرب ایران کے خلاف بنائے گئے اپنے منصوبوں میں بھاری رقم خرچ کررہا ہے تاہم سعودی عرب کو ایران کے سخت رد عمل اور جواب کا بھی بخوبی علم ہے، علی شمخانی نے کہا کہ ایران میں حالیہ بد امنی کے پیچھے ایک ہاتھ سعودی حکومت کا بھی ہے، پریس ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے انہوں نے الزام لگایا کہ سعودی عرب کے ساتھ ساتھ امریکا اور برطانیہ نے ایران کے خلاف ٹوئٹر اور دیگر سماجی رابطوں کی ویب سائٹ کے ذریعے پراکسی جنگ شروع کی ہوئی ہے، اُنھوں نے واضح کیا کہ حالیہ مظاہروں کی لہر سے تہران پریشان نہیں ہے اور معاملات کچھ دن میں معمول پر آجائیں گے، واضح رہے کہ ایک اسرائیلی وزیر یزرائیل کاٹز نے اس خواہش کا اظہار کیا تھا کہ ایران میں بڑے پیمانے پر جاری مظاہروں میں لوگ حکومت کے خلاف کامیاب ہو جائیں گے۔

Share.

About Author

Leave A Reply