آسیہ بی بی کے وکیل قتل دھمکیاں ملنے بعد ملک چھوڑ کر چلے گئے-

0

وفاقی حکومت نے عدالت حکم کے فوراً بعد جیل حکام کیساتھ ملکر آسیہ بی بی کو اسی دن کینیڈا روانگی کا بندوبست کیا تاہم برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق آسیہ بی بی ابھی تک پاکستان ہی موجود ہیں ۔۔۔۔۔۔

اسلام آباد (میزان نیوز) پاکستان میں توہینِ مذہب کے الزام میں سزائے موت کی منتظر مسیحی خاتون آسیہ بی بی کی سپریم کوٹ سے رہائی کے بعد ان کے وکیل ملک چھوڑ کر چلے گئے، فرانسیسی خبر رساں اداے اے ایف پی کے مطابق آسیہ بی بی کے وکیل سیف الملوک کو آسیہ بی بی کا کیس لڑنے اور انہیں رہائی دلوانے کے بعد جان سے مار دینے کی دھمکیاں موصول ہو رہی ہیں، یورپ روانگی سے قبل ایئرپورٹ پر اے ایف پی سے گفتگو کرتے ہوئے 62 سالہ وکیل کا کہنا تھا کہ اس صورتحال میں میرا پاکستان میں رہنا نا ممکن ہے، ان کا مزید کہنا تھا کہ انہوں نے آسیہ بی بی کیلئے مزید قانونی جنگ لڑنی ہے اور ایسے میں ان کا زندہ رہنا بہت ضروری ہے۔تحریک لبیکجب سیف الملوک سے مذہبی جماعتوں کے شور شرابے کے بارے میں بات کی گئی تو انہوں نے بتایا کہ یہ حالات بدقسمت ضرور ہیں لیکن غیر متوقع نہیں ہیں، ان کا مزید کہنا تھا کہ یہاں دکھ کی بات ہماری حکومت کا ردِ عمل ہے جو ملک کی سب سے بڑی عدالت کے حکم کی تعمیل میں ناکام ہوئی، تاہم انصاف کیلئے جدوجہد جاری رہنی چاہیئے، آسیہ بی بی کے وکیل کا کہنا تھا کہ ان کی موکلہ قید میں رہیں یا پھر زندگی کو لاحق خطرات میں آزاد رہیں، ان کی زندگی اپیل کا فیصلہ آنے تک ایک جیسی ہی رہے گی، خیال رہے کہ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں جسٹس آصف سعید کھوسہ اور جسٹس مظہر عالم پر مشتمل 3 رکنی بینچ نے 8 اکتوبر کو محفوظ کیا گیا فیصلہ 31 اکتوبر کو سناتے ہوئے انہیں بری کرنے کا حکم دیا، دوسری طرف مقتول گورنر پنجاب سلمان تاثیر کے بیٹے شان تاثیر نے ایک انٹرویو میں بتایا کہ آسیہ بی بی کینیڈا چلی گئیں ہیں، جس کے بعد یہ خبر گردش کرنے لگی کہ آسیہ بی بی کینیڈا چلی گئی ہیں، جب سوشل میڈیا ہی پر ان سے اس خبر کی صداقت کے بارے میں سوال کیا گیا تو انھوں نے جواب دیا کہ میں نے اس طرف اشارہ نہیں کیا، لیکن اس خبر کو بعد میں اور زیادہ تقویت اس وقت ملی جب صحافی گل بخاری نے ٹویٹ کی اور ’باوثوق ذرائع‘ کے حوالے سے کہا کہ آسیہ بی بی کو اسی دن کینیڈا روانہ کر دیا گیا تھا جس دن سپریم کورٹ کے تین رکنی بینچ نے ان کی بریت کا فیصلہ سنایا تھا، باوثوق ذرائع کے مطابق وفاقی حکومت نے اچھا قدم اٹھایا، عدالت، جیل حکام اور دیگر کے ساتھ مل کر کام کیا اور آسیہ بی بی کی بغیر کسی مسئلے کے اسی دن کینیڈا روانگی کا بندوبست کیا، تاہم برطانوی نشریاتی ادارے کی اپنی تحقیقات کے مطابق آسیہ بی بی ابھی تک پاکستان ہی میں ہیں، اور ان کے بیرونِ ملک جانے کے کوئی شواہد نہیں ہیں۔

Share.

About Author

Leave A Reply